38

حمزہ علی عباسی اور نیمل خاور کی بیٹے کے ساتھ تصویر وائرل

پاکستان کے معروف اداکار حمزہ علی عباسی اور نیمل خاور خان نے شادی کی پہلی سالگرہ کے موقع پر بیٹے کے ساتھ جاری کردی اور مداحوں کی جانب سے محمد مصطفیٰ عباسی کی تصویر کو بہت پسند کیا جارہا ہے۔

یاد رہے کہ حمزہ علی عباسی اور نیمل خاور خان گزشتہ برس 25 اگست کو شادی کے بندھن میں بندھے تھے اور دونوں کی جوڑی کو خوب سراہا گیا تھا۔

اور حال ہی میں ان کے ہاں بیٹے کی پیدائش ہوئی تھی جس کا کا نام محمد مصطفیٰ عباسی رکھا ہے۔

بعدازاں ایک انسٹاگرام پوسٹ میں حمزہ علی عباسی نے اپنے بیٹے کی تصویر بھی مداحوں کے لیے شیئر کی۔

اب حمزہ علی عباسی نے انسٹاگرام پر شادی کی پہلی سالگرہ کے موقع پر اپنے بیٹے اور اہلیہ کی تصویر شیئر کی، اس کے ساتھ ہی انہوں نے اللہ تعالیٰ کا شکریہ ادا کیا اور سورۃ الروم کی آیت نمبر 21 کا ترجمہ بھی لکھا۔

دوسری جانب نیمل خاور خان نے بھی شادی کے پہلی سالگرہ کے موقع پر بچے کے ساتھ تصویر جاری کی اور خوشی کا اظہار کیا۔

خیال رہے کہ حمزہ علی عباسی سے شادی سے قبل نیمل خاور خان نے بھی ایک ڈرامے میں کام کیا تھا تاہم شادی کے دو روز بعد خبر آئی کہ انہوں نے اداکاری سے کناری کسی اختیار کرلیا اور اس کا سبب ان کے شوہر کو قرار دیا جارہا تھا جس پر انہوں نے ایک تفصیلی پوسٹ میں آگاہ کیا تھا کہ وہ شادی سے کافی مہینے پہلے ہی اداکاری چھوڑ چکی تھیں۔

دونوں گزشتہ برس 25 اگست کو شادی کے بندھن میں بندھے تھے—فائل فوٹو: ماہا وجاہت خان
دونوں گزشتہ برس 25 اگست کو شادی کے بندھن میں بندھے تھے—فائل فوٹو: ماہا وجاہت خان

بعدازاں گزشتہ برس 14 نومبر کو حمزہ علی عباسی نے ابھی ایک خصوصی ویڈیو جاری کر کے اداکاری سے کنارہ کشی کا اعلان کردیا تھا جس کے بعد ان کے مداح یہ خبر سن کر کافی افسردہ ہوگئے تھے۔

تاہم 2 مارچ کو ایک ٹوئٹر پییغام میں حمزہ علی عباسی نے واضح کیا تھا کہ انہوں نے اداکاری چھوڑی نہیں البتہ کچھ عرصے کے لیے دوری اختیار کی ہے۔

اداکار نے مزید لکھا تھا کہ ‘میں نے صرف ایک طویل بریک لیا ہے تاکہ میں اپنے دین کے لیے وقت نکال سکوں، امید ہے میں پروجیکٹس بنانے کے ساتھ ایسے پروجیکٹس میں اداکاری بھی کروں جو ان حدود کو مدنظر رکھتے ہوئے بنائے گئے ہوں جو اللہ نے ہمارے لیے طے کیں’۔

حمزہ علی عباسی کیریئر کا آغاز 2006 میں تھیٹر سے کیا تھا، بعدازاں انہوں نے ‘مڈ ہاؤس اینڈ دی گولڈن ڈول’ نامی فیچر فلم بھی ڈائیریکٹ کی۔

وہ ‘وار’، ‘میں ہوں شاہد آفریدی’، ‘جوانی پھر نہیں آنی’ اور ‘پرواز ہے جنون’ جیسی فلموں میں بھی اداکاری کرچکے ہیں۔

حمزہ علی عباسی نے جلد ریلیز ہونے والی فلم ‘دی لیجنڈز آف مولا جٹ’ میں بھی اہم کردار نبھایا ہے۔

اداکار کا پہلا ڈراما ‘میرے درد کو جو زبان ملے’ 2012 میں سامنے آیا تھا، اس کے بعد انہوں نے ‘پیارے افضل’ اور ‘من مائل’ جیسے کامیاب ڈراموں میں کام کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں