16

پاکستان کی واحد یونیورسٹی جس نے پوسٹ گریجویٹ طلبہ کو ماہانہ تنخواہ دینے کا فیصلہ کر لیا

لاہور (آن لائن) گورنمنٹ کالج یونیورسٹی لاہور کا پوری دنیا سے بہترین ذہنوں کو راغب کرنے کے لئے ستمبر 2021 ء سے بہترین پوسٹ گریجویٹ طلباء کو ماہانہ تنخواہ دینے کا فیصلہ- وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر اصغر زیدی کے مطابق ان بہترین پی ایچ ڈی اور ایم فل کے محققین کو نہ صرف ماہانہ تنخواہ دی جائےگی بلکہ یونیورسٹی فیس بھی نہیں ادا کرنا ہوگی۔منتخب ایم فل کے طلباء کو 40ہزار روپے ماہانہ جبکہ پی ایچ ڈی سکالرز کو 60 ہزار ہر ماہ دیئے جائیں گے۔ پروفیسر اصغر زیدی کے مطابق انڈرگریجویٹ پروگراموں میں اضافی نشستوں سے مطلوبہ فنڈز حاصل

کئے جائیں گے۔وائس چانسلر نے کہا کہ معروف عالمی جامعات انڈرگریجویٹ پروگراموں کی آمدنی کا ایک حصہ پوسٹ گریجویٹ تحقیق کو تقویت دینے کے لئے مختص کرتی ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ منتخب شدہ پوسٹ گریجویٹ اسکالرز کو اپنے تحقیقی عنوان سے متعلق ہر سیمسٹر میں دو کورسز پڑھانے ہونگے، یہ عمل انکی تحقیق میں وسعت بخشے گا اور درس و تدریس میں تازہ نظریات لائے گا۔ وائس چانسلر نے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ ہماری اکیڈمک کونسل پہلے ہی اس اسکیم کو منظوری دے چکی ہے۔پروفیسر زیدی نے کہا، ”یہ بدقسمتی کی بات ہے کہ کچھ یونیورسٹیاں پوسٹ آف گریجویٹ ڈگری پروگرامز کے ذریعے پیسے کمارہی ہیں۔ وہ پروگرام کو معاشی طور پر قابل عمل بنانے کے لئے اہلیت سے قطع نظر طلبہ کی ایک بڑی تعداد کو داخل کرتے ہیں۔پروفیسر زیدی نے کہا کہ ایم فل اور پی ایچ ڈی اعلی درجہ کی ڈگری ہیں اور انہیں مالیاتی فوائد کے لئے شروع نہیں کرنا چاہیے۔



اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں