40

وضوں کے ذریعے غربت اور تنگدستی دور کرنے وہ انتہائی آسان طریقے جو نبی کریم ؐ نے اپنے صحابی کو بتائے 

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )آپ سارادن وضوکرتے ہیں کیوں نہ وضو کے ان لمحوں کو موثربنائیں۔ یعنی وضو اتنا بڑا عمل توہے۔ آقاﷺ کی بارگاہ میں ایک شخص حاضرہوا اورعرض کی یارسول اللہ ﷺ گھرفقروفاقہ ہے کچھ بھی نہیں ہے۔حضورپاک ﷺ نے فرمایا توہروقت باوضو رہاکرو۔یعنی وضو اتنا بڑاعمل ہے جس سے اتنے بڑے مسائل حل ہوجاتے ہیں۔ اس نے اس بات کو مانا اوروضاحت نہیں کی اوروہ ہروقت باوضو رہنے لگا اورکچھ عرصے کے بعدحاضرہوا اورکہااللہ نے اتنا دیاہے کہ اب پڑوسیوں کوبھی کھلاتاہوں،اب ہم جب وضو کے لیے جارہے تودل میں فوراخیال آئے کہ اس وضوکوموثربنانا ہے۔ پانی

،وضوکاموقع، وضو کاوقت، میسرتوہومگرمیں نے اس کو موثربنانا ہے اس کوکاراامد بنانا ہے۔ کیش کرنا ہے اورپھرعیش کرناہے۔ اب اس کوموثرکیسے بنائیں۔ کہتے ہیں جب بندہ وضو کرتے وقت بسم اللہ والحمدللہ پڑھتاہے جب تک وضو رہتاہے فرشتے بیشماراس کی نیکیاں لکھتے لکھتے تھک جاتے ہیں۔



اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں