96

سینٹ میں بڑ ے ٹاکرے سے قبل ن لیگ کو ناقابل تلافی نقصان اہم ترین رکن اسمبلی کرونا کے باعث انتقال کر گئے

اسلام آباد،کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک، این این آئی)پاکستان مسلم لیگ ن کے پی پی 84 خوشاب سے منتخب رکن صوبائی اسمبلی ملک وارث کلو انتقال کر گئے۔وہ لاہور کے نجی ہسپتال میں زیر علاج تھے۔نجی ٹی وی کے مطابق ملک وارث کلو کورونا وائرس کا شکار تھے۔وارث کلو پہلیبار 2002 کے انتخابات میں رکن صوبائی اسمبلی منتخب ہوئے۔ وہ 2018 میں بھی پاکستان مسلم لیگ(ن)کے ٹکٹ پر رکن صوبائی اسمبلی منتخب ہوئے،وہ ن لیگ کی جانب سے ڈپٹی سپیکر کے عہدے کے امیدوار تھے تاہم ان کو شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔دریں اثنا چیئرپرسن چائلڈ پروٹیکشن بیورو سارہ احمد کا کورونا

وائرس ٹیسٹ مثبت آگیا اس حوالے سے چیئرپرسن چائلڈ پروٹیکشن بیورو سارہ احمد نے کہا کہ کورونا وائرس ٹیسٹ مثبت آنے پر، میں نے خود کو قرنطینہ کرلیا ہے۔چیئرپرسن سارہ احمد نے بتایاکہ سب کے لیے ایک مشکل وقت ہے، اللّہ پاک سب کو اپنیحفظ و امان میں رکھے۔سارہ احمد کا کہنا تھا کہ تمام احباب اور خصوصاََ چائلڈ پروٹیکشن بیورو کے بچوں سے دآعا کی اپیل کرتی ہوں۔واضح رہے کہ ملک بھر میں کورونا وائرس سے انتقال کرنے والوں کی مجموعی تعداد 13 ہزار 430 ہو گئی ہے، جبکہ کْل مریضوں کی تعداد 6 لاکھ198ہو چکی ہے۔دوسری جانب ریسرچ کمپنی آئی پی ایس او ایس کے نئے سروے میں انکشاف ہواہے کہ61 فیصد پاکستانیوں نے کورونا کی ویکسین لگوانے کا ارادہ ظاہر کیا البتہ 39 فیصد نے انکار کردیا۔سروے میں پاکستان کو دنیا کے ان ممالک میں شامل کیا گیا ہے جہاں ویکسین لگوانے کے بارے میں عوام زیادہ پرجوش نہیں۔کورونا ویکسین نہ لگوانے کی وجوہات میں سب سے زیادہ یعنی 23 فیصد پاکستانیوں نے ویکسین کے مضر اثرات کا خدشہ ظاہر کیا جبکہ 21 فیصد نے عمومی طور پر ہر طرح کی ویکسین کے خلاف ہونے کا کہا ہے۔



اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں